پاکستان میں کورونا وائرس کے مزید دو کیسز سامنے آگئے

Pakistan
US volunteers test first vaccine

ہفتے کے روزحکام نے کراچی اور اسلام آباد سے ناول کورونا وائرس (COIVD-19) کے دو اور کیسز کی تصدیق کی ہے جس سے ملک میں ایسے مریضوں کی تعداد چار ہوگئی ہے۔

حکام نے بتایا کہ دونوں ہی نئے مریض حال ہی میں ایران سے واپس آئے تھے اور ان کے اہل خانہ سے کہا گیا تھا کہ گھر میں ہی رہیں اور اگر ان میں سے کسی کو فلو جیسی علامت پیدا ہوجائے  تو وہ جلد متعلقہ اداروں کو رپورٹ کریں۔

محکمہ صحت سندہ کے ترجمان کے مطابق ہفتہ کے روز ایک مشتبہ شخص کو نجی ہسپتال کے الگ وارڈ میں داخل کیا گیا تھا جس مین وائرس کی تصدیق ہوگئی ہے۔

 انھوں نے مزید بتایا ہے کہ یہ مریض آٹھ سے دس دن پہلے ایران سے واپس آیا تھا اور پانچ دن قبل فلو جیسی علامات پیدا ہوئی تھی ۔

 جب کہ ان کے اہل خانہ سے کہا گیا ہے کہ گھر میں ہی رہیں اور اگر ان میں سے کسی میں فلو جیسی علامات پیدا ہوجائیں تو اس کی اطلاع فوری طور پر کریں۔

جب کہ سندہ سے تعلق رکھنے والے دوسرے مریض کے بارے میں بتایا ہے کہ مریض کی حالت اب بہتر ہورہی ہے۔

ترجمان حکومت سندہ کے مطابق اگر مریضوں کی تعداد میں اضافہ ہوجاتا ہے تو حکومت سندہ نے کراچی شہر کے گڈاپ ٹائوں میں ایک نجی ہسپتال کا انتخاب کیا ہے تاکہ وہ کورونا وائرس کے مشتبہ مریضوں کو داخل کرسکیں ۔

یاد رہے کہ پاکستان میں متاثرہ چاروں افراد حال ہی میں ایران سے واپس آئے تھےجو مشرق وسطی میں وبا کا مرکز ہے رپورٹ کے مطابق اب تک ایران میں 43 اموات کی اطلاع موصول ہوئی ہے۔

وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائی صحت ڈاکٹر ظفرمرزا کے مطابق ایران سے آنے جانے والی تمام پروازیں معطل کردی گئی ہیں اور ایران کے ساتھ اپنی سرحد کو بھی بند کردیا گیا ہے۔