عام انسان کےلیے خلا میں جانے کے راستے ہموار

Space

لندن : اب خلائی سیاحت کے راستے کھل گئے ہیں اب ایک عام انسان بھی ٹکیٹ لے کے خلا میں جایا کرے گا Tourism Venture Virgin Galactic نے پہلی بار خلائی جہاز کو کمرشل پرواز کے طور پر خلا میں چھوڑا ہے جو تین لوگوں کو لے کےخلا میں گیا تھا۔ اس خلائی جہاز کوایسے مسافروں کے لیے تیار کیا گیا ہے جو خلا میں جا کے کچھ منٹس کے لیے وزن نہ ہونے (Weightlessness) کو محسوس کر سکیں گے۔

اس سے پہلے پچھلے سال دسمبر میں Tourism Venture Virgin Galactic کا پہلا خلائی جہاز زمین کے ماحول کو توڑ کے خلا میں گیا تھا جو 52 میل کی اوچائی پہ گیا تھا جس کو خلا کا شروعاتی فیز کہا جاتا ہے اور اس ٹیسٹ کے دوران خلائی جہاز کی رفتار آواز سے تین گنا زیادہ تھی اس جہاز کوپچھلے سال کے بعد پانچوین بار خلا میں چھوڑا گیا ہے۔ Virgin کے بانی رچرڈ براڈسن کا کہنا ہے کہ خلائی ٹورئزم کے لیے 150000 ڈالر سے 200000 ڈالر پر سیٹ چارج کیا جا سکتا ہے اس وقت 700 سے زیادہ ٹکیٹس بک کیئے جا چکی ہیں جولائی 2019 کے بعد مکمل کمرشل پروازوں کا آغاز کیا جائے گا۔