ایک ایسا فیبرک جوموسم کی شدت کو ریگیولیٹ رکھتا ہے

Technology

محققین نے ایک ایسا فیبرک بنایا ہےجو حالات کی بنا پر خود بخود تبدیل ہوتا ہے اور  موسم کی شدت سے بچاتا ہے، اس فیبرک کومصنوئی دھاگے اور کاربان نینو ٹیوب کوٹنگ سے بنایا گیا ہے جو درجہ حرارت اور نمی سے ایکٹیویٹ ہوتا ہے۔ زیادہ نمی اور گرم موسم کی وجہ سے تپش کو چھوڑتا ہے جب کہ ٹھنڈی موسم میں گرمائش کو اندر کی طرف لیتا ہے۔

یونیورسٹی آف میریلینڈ کے ماھرین نے بتایا ہے کہ یہ دنیا کا پہلا ایک ایسا فیبرک ہے جو گرمی کو خود بخود آسپاس کے ماحول کے بنا پرقابو میں لانی کی قابلیت رکھتا ہے، اس سے پہلے میراتھون رنرس ہائی ٹیک تھرمل خصوصیات والا مٹیئریل استعمال کرتے تھے لیکن ان کے اندر خود بخود ریگیولیٹ ہونی کی خاصیت نہیں تھی، ماھریں کا کہنا ہے کہ یہ فیبرک اپنی نوعیت کا پہلا مٹئریل ہے جو آسپاس کے ماحول کے بدلنے سے پہنے ہوئے کپڑوں کی خوبیاں بدلے گا اور ٹیکسٹائل کے شعبے میں منفرد خصوصیات کی وجہ سےمارکیٹ میں ایک الگ پہچان بنائے گا۔