دنیا کی پہلی مصنوئی آنکھ جو تھری ڈی ریٹنا کی مدد سے انسانی آنکھ کی طرح دیکھ سکتی ہے

Technology
World's first spherical artificial eye has 3D retina

ہانگ کانگ یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالاجی کے سائنسدانوں کی سربراہی میں ایک بین القوامی ٹیم نے حال ہی میں دنیا کی پہلی تھری ڈی مصنوئی آنکھ تیار کی ہے جو موجودہ بایونک آنکھوں سے کئی گنا بہتر ہے، جب کہ کچھ معاملات میں تو انسانی آنکھ سے بھی زیادہ بہتر ہے۔ اس کو ہیومنائڈ روبوٹ کی بینائی دور کرنے کےلئے بنایا گیا ہے جب کہ آنکھوں کے نور سے محروم لوگوں کےلئے بھی ایک امید کی کرن بن سکتی ہے۔

سائنسدان کئی دہائیوں سے حیاتیاتی آنکھ کی ساخت اور کلئرٹی کو نقل کرنے کی کوشش کررہے تھے۔ لیکن موجودہ مصنوئی آنکھوں کے ذریعے فراہم کردہ وژن اکثر بیرونی اسپیکٹلس سے آتا تھا جو کیبلز کے ذریعے منسلک تھی ، جس کی ریزولیشن 2D فلیٹ امیج سینسر کی وجہ سے بہت خراب ہوتی ہے۔

جب کہ ہانگ کانگ یونیورسٹی میں تیار کردہ یہ الیکٹروکیمیکل آنکھ نا صرف پہلی بار ایک قدرتی آنکھ کی ساخت کی نقل کرتا ہے بلکہ مستقبل میں کسی انسانی آنکھ سے زیادہ تیز وژن پیش کرسکتا ہے۔ جیسے اندہیرے میں انفراریڈ ریڈیئیشن کا بھی پتا لگا سکے گا۔

اس طرح کی پیش رفت میں کلیدی کردار مصنوئی 3D ریٹنا کا ہے۔ جو ایک نینو وائر لائٹ سینسرس کا گچھا ہے جو انسان کے ریٹنا سے فوٹو رسیپٹر کو کاپی کرنے کی خصوصیت رکھتا ہے۔ جس کو ہانگ کانگ یونیورسٹی کے پروفیسر فین ژیانگ نے بنایا تھا۔

ٹیم نے نینو وائر لائٹ سینسرس کو لکیوڈ میٹل تاروں کے ایک بنڈل سے جوڑا جو نروز کا کام کررہی تھی جس کو انسانی ساختہ ہیمسفریکل ریٹنا سے جوڑا گیا تھا، اور کامیابی کے ساتھ ان وزیول سگنلس کی نقل کی گئی تھی جو انسان کی آنکھ دیکھتی ہے۔

مستقبل میں ان نینو وائر لائٹ سینسرس کو بینائی سے محروم لوگوں پر لگایا جاسکتا ہے۔

اس کے علاوہ، یہ نینو وائر لائٹ سینسرس انسانی ریٹنا میں فوٹورسیپٹرس سے بھی زیادہ کثافت رکھتے ہیں، لہذا مصنوئی ریٹنا زیادہ ہلکے سنگنل حاصل کرسکتا ہے اور ممکنہ طور پر انسانی ریٹنا سے زیادہ امیج ریزولیشن حاصل کر سکے گا اگر نینو وائرکو انفرادی طور پر بنایا جائے۔

بنانے والی ٹیم کا کہنا ہے کہ اگلے مرحلے میں ہم اس مصنوئی آنکھ کی کارکردگی، مضبوطی اور بائیو کامٹیبلیٹی کو مزید بہتر بنانے پر کام کررہے ہیں۔ اور اس کام کو آگے بڑہانے کےلئے ان طبی ماھرین کے ساتھ کام کرنے کے منتظر ہیں جو آپٹومیٹری اور اوکیولر مصنوئی اعضاء کے متعلق مھارت رکھتے ہیں۔